1814

موبائل فون پر پابندی ‘ شہری اور دکاندار پریشان 

پشاور۔1کروڑ سے زائد سمگل شدہ موبائل فون پر 20اکتوبر کے بعد پابندی سے شہری اور دکاندار پریشان ہو گئے اچانک پابندی سے کاروبار کے بندش اور تباہ ہونے کے امکانات بھی پیدا ہو گئے ہیں

پشاور کے مختلف مختلف موبائل پلازوں اوتاجروں کے پاس مجموعی طور پر لاکھوں کی تعداد میں سمگل شدہ اور غیر قانونی موبائل فون موجود ہیں جبکہ ملک بھر میں مجموعی طور پر 1کروڑ سے زائد سمگل شدہ اور غیر قانونی موبائل موجود ہیں پی ٹی اے کی جانب سے موبائل استعمال کرنے والوں کو ایس ایم ایس کیا جا رہاہے کہ وہ بیس اکتوبر سے پہلے اپنے سمارٹ فونز اور جی ایس ایم ڈیوائسز کی تصدیق کرے اس کے بعد صرف تصدیق کردہ موبائل فون اور ڈیواس ہی فعال رکھے جا ئینگے اور باقی کو بلاک کیا جائے گا

20اکتوبر کے بعد ایک کروڑسے زائد سمارٹ موبائل فون کو بند کردیا جائے گا اس اعلان کے بعد شہری اورتاجری شدید پریشان ہو گئے ہیں صارفین کے موقف اختیار کیا ہے کہ ہمارے نقصان کا ذمہ دار کو ن ہوگا حکومت کو چاہئے جو پہلے سے موبائل فونز خریدچکے ہیں انہیں ریلیف دے اچانک پابندی سے ملک میں اچھے موبائل فونز کی قلت پیدا ہو سکتی ہے جبکہ بعض شہریوں نے سمگل شدہ موبائل فونز کے استعمال پرپابندی لگانا اچھا اقدام قراردیاہے ۔