303

سربند میں دوستوں کے ہاتھوں 2جگری د وست قتل

پشاور۔پشاور کے مضافاتی علاقہ سربند میں نامعلوم وجوہات کی بناء پر دوستوں نے اپنے 2جگری دوستوں کو فائرنگ کرکے قتل کردیااور نعشیں ویرانے میں پھینک کر فرار ہوگئے مقتولین میں سکیورٹی فورسز اہلکار بھی شامل ہے جو چھٹیوں پر گھر آیا ہوا تھا۔

 پولیس نے پوسٹمارٹم کے بعد نعشیں ورثاء کے حوالے کردی اور مقدمہ درج کرکے مختلف ذاویوں سے تفتیش کا آغاز کردیامحمد رضوان ولد ولایت شاہ سکنہ پلوسئی تلازئی نے رپورٹ درج کراتے ہوئے سربند پولیس کو بتایا کہ اس کا بھائی وسیم احمد جو پاک آرمی میں تعینات ہے کئی دنوں سے چھٹی پر گھر میں موجود تھا،گزشتہ شب وسیم اپنے دوستوں امان ولد شہزاد گل اور ذکاء اللہ ولد قدرت اللہ ساکنان پلوسئی کے ساتھ گھر سے نکل کر چلا گیا اور رات بھر واپس نہیں آیا۔

جبکہ پیر کے روز اچینی بانڈہ میں کھیتوں سے وسیم احمد اور اس کے دوسرے دوست عزیز خان ولد شاہد محمد ساکن لنڈی کوتل کی گولیوں سے چھلنی نعشیں برآمد ہوئی محمد رضوان نے بتایا کہ اس کے بھائی اور دوست عزیز خان کو امان اور ذکاء اللہ نے قتل کیا ہے جو واردات کے بعد فرار ہوگئے۔ پولیس نے جائے وقوعہ سے شواہد اکٹھے کرکے ملزمان کی تلاش شروع کردی ہے۔