155

پاک بھارت تعلقات بہتر بنانے میں چین پاکستان کا حامی

بشکیک۔چینی صدر شی جن پنگ نے  پاک بھارت تعلقات  بہتر بنانے  کے حوالے سے  پاکستان کی حمایت کا اعلان کرتے ہوئے کہا  ہے کہ چین  پاکستان کی ہرممکنہ حد تک مدد کرنا چاہتا ہے، پاکستان میں انسداد دہشت گردی سے متعلق اقدامات کی حمایت کے لیے امداد بھی فراہم کرنا چاہتا ہے۔

 چین کے صدر شی جن پنگ نے بشکیک میں پاکستانی وزیر اعظم عمران خان سے ملاقات کی جس میں  شی جن پنگ نے کہا کہ گزشتہ آٹھ ماہ میں ہمارے درمیان تین ملاقاتیں ہوئیں جو اس بات کا مظہر ہیں کہ چین اور پاکستان کے درمیان چار موسموں کے اسٹریٹیجک تعاون کے ساتھی کے تعلقات کو اعلی سطح پر برقرار رکھا جارہا ہے۔پیچیدہ عالمی اور علاقائی صورتحال میں چین اور پاکستان کو مزید قریبی رابطوں اور تعاون کو فروغ دینا چاہیئے اور ایک مضبوط ہم نصیب معاشرے کی تعمیر کرنی چاہیئے۔شی جن پنگ نے کہا کہ ہمیں چین -پاک چار موسموں کے اسٹریٹیجک تعاون کے ساتھی کے تعلقات اور جامع تعاون کا تحفظ کرنا چاہیئے اور تعلقات کو مزیدمستحکم بناتے ہوئے انہیں بھرپور فروغ دینا چاہیئے۔ 

فریقین کو مشترکہ دلچسپی کے مسائل پر تبادلہ خیال کرنا چاہیئے اور عالمی و علاقائی سکیورٹی اور استحکام کی مشترکہ طور پر حفاظت کرنی چاہیئے۔ چین پاکستان کی ہرممکنہ حد تک مدد کرنا چاہتا ہے اور پاکستان میں انسداد دہشت گردی سے متعلق اقدامات کی حمایت کے لیے امداد بھی فراہم کرنا چاہتا ہے۔ اس کے ساتھ ہی پاکستان اور بھارت کے تعلقات کو بہتر بنانے کے حوالے سے بھی چین پاکستان کی حمایت کرتا ہے۔عمران خان نے کہا کہ چین پاکستان کا چار موسموں کے اسٹریٹیجک تعاون کا ساتھی ہے۔ پاکستان چین کی جانب سے طویل مدتی حمایت اور امداد کا شکریہ ادا کرتا ہے۔

 پاکستان عالمی اور علاقائی امور میں چین کے مثبت کردار کو بے حدسراہتا ہے۔پاکستان، چین- پاک اقتصادی راہدای کی تعمیر کو مستحکم طور پر آگے بڑھا رہا ہے اور اس کی سکیورٹی کو یقینی بنانے کے لیے موثر اقدامات اختیار کیے جائیں گے۔