1728

کامیاب آغاز کے بعد ویسٹ انڈیز کا ورلڈکپ میں فاتحانہ اختتام

لیڈز: آئی سی سی کرکٹ ورلڈ کپ 2019 کے 42 ویں میچ میں ویسٹ انڈیز نے اٖفغانستان کو 23 رنز سے شکست دیکر اچھے نوٹ کے ساتھ ٹورنامنٹ کا اختتام کیا۔

لیڈز کے ہینڈگلے اوول گراؤنڈ میں کھیلے گئے میچ میں ویسٹ انڈیز کے کپتان جیسن ہولڈر نے ٹاس جیت کر خود بیٹنگ کا فیصلہ کیا تو کرس گیل اور ایون لیوس نے اننگز کا آغاز کیا۔ ویسٹ انڈین اوپنرز نے اپنی ٹیم کو اچھا آغاز فراہم نہ کر سکے اور  21 کے مجموعی اسکور پر کرس گیل 7 رنز بنا کر دولت زدران کا شکار ہو گئے۔

گیل کے جلد آؤٹ ہونے کے بعد اوپنر لیوس اور شائے ہوپس کے درمیان 88 رنز کی شراکت ہوئی اور 109 رنز پر ایون لیوس 55 بنا کر راشد خان کی گیند پر کیچ آؤٹ ہو گئے۔

نئے آنے والے بلے باز شیمرون ہیٹ مئیر اور شائے ہوپس نے ٹیم کا اسکور 174 رنز تک پہنچایا تو ہیٹ مئیر 39 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئے اور شائی ہوپس بھی 77 رنز کی اننگز کھیل کر آؤٹ ہوئے۔

نکولس پوران نے ایک بار پھر 58 رنز کی شاندار اننگز کھیلی جب کہ کپتان جیسن ہولڈر کے بلے نے بھی 45 رنز اگلے۔ ویسٹ انڈیز نے مقررہ 50 اوورز میں 6 وکٹوں کے نقصان پر 311 رنز بنائے۔

افغانستان کی جانب سے دولت زدران نے 2 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا جب کہ سید شہرزاد، محمد نبی اور راشد خان نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔ ویسٹ انڈین ہدف کے تعاقب میں افغانستان کی جانب سے اننگز کا آغاز مایوس کن رہا اور صرف 5 رنز پر اوپنر گل بدین نائب 5 رنز بنا کر کیمار روچ کے ہاتھوں آؤٹ ہو گئے۔

دوسری وکٹ کے لیے رحمت شاہ اور اکرام علی خل کے درمیان 133 رنز کی شاندار شراکت ہوئی، ٹیم کا اسکور 138 رنز پر پہنچا تو رحمت شاہ 62 رنز بنا کر بریتھ ویٹ کی گیند پر کیچ آؤٹ ہو گئے۔

189 کے مجموعی اسکور پر اکرام علی 86 رنز بنا کر کرس گیل کی گیند پر ایل بی ڈبلیو ہو گئے۔ اصغر افغان نے 40 رنز بنائے جب کہ نجیب اللہ زدران 31 بنا کر آؤٹ ہوئے۔

اس طرح افغانستان کی پوری ٹیم 50 ویں اوور کی آخری گیند پر 288 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی۔ ویسٹ انڈیز کی جانب سے کارلوس بریتھ ویٹ نے 4 وکٹیں حاصل کیں جب کہ کیمار روچ نے 3 اور کرس گیل اور تھومس نے ایک ایک کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔

 دونوں ٹیمیں ورلڈ کپ کی دوڑ سے پہلے ہی باہر ہو چکی ہیں، ویسٹ انڈیز 5 پوائنٹس کے ساتھ نویں جب کہ افغانستان کی ٹیم ایونٹ میں کوئی میچ نہیں جیت سکی اور پوائنٹس ٹیبل پر صفر پوائنٹ کے ساتھ دسویں نمبر پر ہے۔

ماضی میں 2 مرتبہ ورلڈ کپ کی ٹرافی اپنے نام کرنے والی ٹیم ویسٹ انڈیز نے ٹورنامنٹ کا آغاز پاکستان کو ہرا کر کیا جس کے بعد اسے یکے بعد دیگرے 6 میچز میں شکست کا سامنا کرنا پڑا جب کہ کالی آندھی کا ایک میچ بارش کے باعث متاثر ہوا۔