695

متھرا قتل کا ڈراپ سین ٗ نوبیاہتا دلہن شوہر کی قاتل نکلی 

پشاور۔کیپٹل سٹی پولیس پشاور نے نواحی علاقے متھرا میں تقریباً2 ماہ قبل جوانسال لڑکے قتل کا ڈراپ سین ہوگیا مقتول کو اس کی اہلیہ نے آشنا کے ساتھ ملکر قتل کیا پولیس نے قاتلہ بیوی کو آشنا سمیت گرفتارکرلیا جن کی نشاندہی پر آلہ قتل اور واردات میں استعمال ہونیوالی موٹر سائیکل بر آمد کرلی گئی ہے ملزموں نے ابتدائی تفتیش میں واردات کا اعتراف کرلیا ہے۔

اس ضمن میں گزشتہ روز ڈی ایس پی انوسٹی گیشن رورل حاجی عنایت خان نے بتایاکہ 12 مئی کو حبیب الرحمن ولد حاجی حبیب گل سکنہ متھرارپورٹ درج کرائی تھی کہ اس کابھتیجا 25 سالہ رحمن اللہ ولد سید رحمن کسی کام کی غرض سے باہر گیا تھا تاہم بعد ازاں اس کی گھر کے قریب واقع کھیتوں سے اس کی نعش برآمد ہوئی جسے نامعلوم ملزمان نے فائرنگ کرکے قتل کردیا تھا واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے ایس ایس پی انوسٹی گیشن نثار خان کی ہدایت پر ڈی ایس پی رورل کی نگرانی میں انوسٹی گیشن آفیسر فرہاد خان پر مشتمل خصوصی ٹیم نے مختلف زاویوں پر تفتیش شروع کی تو معلوم ہواکہ مقتول رحمان کو اس کی بیوی سدرہ نے اپنے آشنا عدنان و لد جہانزیب سکنہ نور گڑھ سفید سنگ کے ساتھ ملکر اسے قتل کیا اور نعش کھیتوں میں پھینک دی ۔

پولیس نے کاروائی کرتے ہوئے دونوں ملزموں کو گرفتار کرلیا جن کی نشاندہی پر آلہ قتل بھی برآمد کرلیاگیا ہے پولیس نے مقدمہ درج کرکے مزید تفتیش شروع کردی ہے ۔ پولیس کے مطابق ملزم عدنان نے دوران تفتیش بتایاکہ ملزمہ نے شوہر کو قتل کرنے اور بعدازاں اس کے ساتھ شادی کرنے کا وعدہ کیاتھا جس پر اس نے یہ قدم اٹھایا جبکہ وہ دنوں کافی عرصہ سے ایک دوسرے کوپسند کرتے تھے ادھر ملزمہ نے پولیس کوبتایاکہ ملزم نے کئی بار سے اصرار کیا کہ وہ گھر سے بھاگتے ہیں لیکن اس نے شوہر کو قتل کرنے کی منصوبہ بندی کی اور پھراسی منصوبہ بندی کے تحت اسے قتل کیا ۔

مقتول کے والدین آج تک اپنے اکلوتے بیٹے کے غم کو نہ بھول سکے پولیس کے مطابق والدین نے اپنے اکلوتے بیٹے کیلئے بڑی دھوم دھام سے شادی کرائی لیکن ملزمہ کو وہ پسند نہیں تھا کیونکہ اس کے اپنے رشتہ دار سے تعلقات تھے اور اسی بناء سے اسے فائرنگ کرکے قتل کروایا۔