525

’’ ایرا ‘‘ نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی میں ضم

پشاور۔ وفاقی حکومت نے آفات سے نمٹنے اور اور متاثرین کی بحالی کے ادارے ’’ ایرا ‘‘ کو نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی میں ضم کرنے کی تجویز کو حتمی شکل دے دی ہے جبکہ ایرا کے ملازمین کو ان کے صوبوں کے حوالے کرنے جبکہ وفاقی ملازمین کو وفاق کے حوالے کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے اس بات کا فیصلہ ایراکو این ڈی ایم اے میں مرج کرنے کے لئے قائم ٹاسک فورس کے اجلاس میں کیا گیا ہے ۔

اجلاس میں ایرا کو ختم کرکے اسے این ڈی ایم اے میں شامل کرنے سے متعلق تجاویز پر تفصیلی غور کے بعد فیصلہ کیا گیا ہے اجلاس میں ایرا کے پاس دستیاب اعداد و شمار کا جائزہ لیا گیا جبکہ اس حوالے سے فنانس ہیومن ریسورس اور پراجیکٹس کے حوالے سے تین کمیٹیاں قائم کرنے کی منظوری دی گئی جس کے ممبران اور ٹی او آرز کا اعلان این ڈی ایم اے کرے گی۔ اجلاس کو بتایا گیا ہے کہ فنانس کمیٹی ایرا کا مالی سال 2020-2021ء کا بجٹ این ڈی ایم اے کے اکاؤنٹ میں منتقل کرنے کے لئے طریقہ کار وضع کرے گی۔

ایرا کے اثاثوں کا بھی جائزہ لیا جائے گا اسی طرح ہیومن ریسورس کمیٹی ایرا کے ملازمین کو این ڈی ایم اے میں ضم کرنے کے لئے طریقہ کار وضع کرے گی تاہم پیرا اور ایرا کے ملازمین ان کے صوبوں کے حوالے کئے جائیں گے جبکہ سرپلس ملازمین کو وفاقی حکومت کے پول میں بھیجا جائے گا اور اس حوالے سے 8 ہفتوں میں کمیٹی اپنی سفارشات ارسال کرے گی اسی طرح پراجیکٹ کمیٹی ایرا کے تمام منصوبوں کی فزیکل اور فنانشل معاملات کا جائزہ لے کر اپنی سفارش پیش کرے گی۔